امریکہ میں مگرمچھ کے منہ سے بچے کی باقیات برآمد

امریکی ریاست فلوریڈا میں ایک پولیس افسر نے مگرمچھ کے منہ سے دو سالہ بچے ٹیلن موسلے کی باقیات نکالنے کے لیے مگرمچھ کو گولی مار دی۔اس سے ایک روز قبل ٹیلن کی والدہ کی لاش ان کے فلیٹ سے ملی تھی جس کے بعد سے یہ بچہ لاپتہ تھا۔مقامی اخبار کی رپورٹ کے مطابق ٹیلن کی والدہ پشن جیفری جمعرات (30 مارچ) کو اپنے اپارٹمنٹ میں مردہ پائی گئی تھیں اور ان کے چھوٹے بچے کا کوئی نام و نشان نہیں تھا۔جمعے کو فلوریڈا کے علاقے سینٹ پیٹرز برگ میں ڈیل ہومز پارک کے قریب ایک پولیس افسر نے گمشدہ بچے کو ایک مگرمچھ کے منہ میں دیکھا۔افسر نے اپنے ہتھیار سے مگرمچھ پر فائرنگ کی جس کے بعد اس نے بچے کی لاش گرا دی، تاہم اس واقعے میں مگرمچھ بھی مارا گیا۔سینٹ پیٹرزبرگ پولیس کے سربراہ انتھنی ہولوے نے کہا کہ ’میں بچے کے خاندان اور ان کے پیاروں سے تعزیت کرتا ہوں۔‘انہوں نے مزید کہا’ہمیں بہت افسوس ہے کہ بچے کا ایسا انجام ہوا۔ ہم نہیں چاہتے تھے کہ وہ ہمیں اس طرح ملے لیکن کم از کم ہم اب اس کے خاندان کو کچھ بتا سکتے ہیں۔

You might be interested in