ملک میں 28 اشیائے ضروریہ کی قیمتوں میں اضافہ، مہنگائی کی شرح 47.97 فیصد ہوگئی

ملک میں مہنگائی میں مزید اضافہ ہوگیا اور محکمہ شماریات نے ہفتہ وار صورتحال پر اعدادوشمار جاری کردیے۔

ادارہ شماریات کے مطابق مہنگائی مزید 0.96 فیصد بڑھ گئی اور مہنگائی کی مجموعی شرح 47.97 فیصد کی سطح تک پہنچ گئی۔

ادارہ شماریات نے بتایا کہ ایک ہفتے میں 28 اشیا کی قیمتوں میں اضافہ ہوا،  ٹماٹر 8 روپے 92 پیسے، 190گرام چائے کا پیکٹ 39 روپے 67 پیسے، آلو 2 روپے 26 پیسے فی کلو اور کیلے ساڑھے7 روپے فی درجن مہنگے ہوئے۔

ادارہ شماریات کاکہنا ہے کہ حالیہ ہفتے چینی 2 روپے 78 پیسے فی کلو، بیس کلو آٹے کا تھیلا 42 روپے 55 پیسے، ڈہائی کلو خوردنی گھی کا ڈبہ 18روپے 3 پیسے فی کلو مہنگا ہوگیا۔

ادارہ شماریات کے مطابق نمک، دودھ، بیف، دہی اور چاول کی قیمتوں میں اضافہ ہوا جبکہ 11 اشیائے ضروریہ سستی ہوئیں۔

ادارہ شماریات نے بتایا کہ حالیہ ہفتے پیاز 25 روپے، چکن 25 روپے 62 پیسے فی کلو سستاہوا، لہسن 23 روپے42 پیسے، دال مسور 6 روپے 43 پیسے فی کلو، انڈے 5 روپے 53 پیسے فی درجن، دال چنا 3 روپے 22 پیسے فی کلو سستی ہوئی۔ اس کے علاوہ دال ماش، دال مونگ کی قیمتوں میں بھی کمی ہوئی۔

ادارہ شماریات کے مطابق حالیہ ہفتے 12 اشیائے ضروریہ کی قیمتوں میں استحکام رہا۔

You might be interested in